چندروایتوں کی تحقیق 

وسیلہ سے متعلق روایت کی تحقیق 
اکتوبر 30, 2018
’السلطان ظل ﷲ‘کی تحقیق
اکتوبر 30, 2018

چندروایتوں کی تحقیق

سوال :1-الأکل فی السوق دناء ۃ۔ ۲- کنت نبیا وآدم بین الماء والطین۔ ۳-لولاک لما خلقت الافلاک ……لولا ہو ما خلقتک۔ ایک صاحب مندرجہ احادیث کے راویوں کو کذاب گردانتے ہیں اور کہتے ہیں کہ ان میں سے کوئی حدیث نہیں ہے ،ان کا شمار کن لوگوں میں ہوگا ؟ ِ

ھوالمصوب:

1-’’الأکل فی السوق دناء ۃ‘‘اس روایت کو بیہقی نے رد کیا ہے ،اس میں ایک راوی محمد بن فرات کو کذاب کہا گیاہے ،اور خطیب نے ہیثم بن سہل کو ضعیف کہا ہے، عقیلی محدث نے کہا ہے کہ اس باب میں کوئی صحیح روایت نہیں ہے (1) ۲-حدیث لولاک…… ملا علی قاری نے موضوع لکھا ہے ،صنعانی اور دوسرے بعض علماء نے موضوع کہا ہے(۲) اور بعض علما ء نے اس روایت کو اپنے معنی کے اعتبار سے صحیح قرار دیا ہے (۳) ۳-حدیث ’’کنت نبیا وآدم بین الماء والطین ‘‘بھی موضوع ہے : ذکرہذا والذی قبلہ السیوطی فی ذیل الأحادیث الموضوعۃ…… وقال ابن تیمیۃ فی رد علی البکری ’’لا اصل لہ ،لا من نقل ولا من عقل،فان أحدا من المحدثین لم یذکرہ(1) وقال الزرقانی فی شرح المواہب…… ’’صرح السیوطی فی الدرر بأنہ لا أصل لہ والثانی من زیادۃ العوام وسبقہ إلی ذالک الحافظ ابن تیمیہؒ فافتی ببطلان اللفظین وأنھما کذب ‘‘(۲) تحریر:محمد ظہور ندوی عفا اﷲ عنہ