’السلطان ظل ﷲ‘کی تحقیق

چندروایتوں کی تحقیق 
اکتوبر 30, 2018
من تشبہ بقوم فھو منہ کی تحقیق
اکتوبر 30, 2018

’السلطان ظل ﷲ‘کی تحقیق

سوال :جمعہ کے خطبہ میں احادیث کے ساتھ یہ الفاظ پڑھے جا تے ہیں ’’والسلطان ظل اللّٰہ فی الأرض من أہان سلطان اللّٰہ فی الأرض أہانہ ﷲ ‘‘بظاہر محسوس ہوتاہے کہ یہ الفاظ بطور تحریف بڑھائے گئے ہیں ،کیا واقعی حدیث میں مذکورہ الفاظ وارد ہوئے ہیں ،ان الفاظ کا پڑھنا جائز ہے یا نہیں ؟ ِ

ھوالمصوب:

حدیث شریف میں ہے کہ: عن زیاد بن کسیب العدوی قال کنت مع أبی بکرۃ تحت منبرابن عامر وہو یخطب وعلیہ ثیاب رقاق فقال أبوبلال أنظروا إلی أمیر نا یلبس ثیاب الفساق فقال ابوبکرۃ اسکت سمعت رسول ﷲ ﷺیقول: من أہان سلطان ﷲ فی الأرض أہانہ ﷲ ہذا حدیث حسن غریب(۳) حدیث کے الفاظ ترمذی کے حوالہ سے تحریر ہیں،ہندوستان میں چونکہ شرعی سلطان نہیں ہے ،اس لئے اب اس کے پڑھنے کی ضرورت نہیں ہے تحریر: محمد ظہور ندوی عفا ﷲ عنہ